Unlimited After Effects and Premiere Pro templates, stock video, royalty free music tracks & courses! Unlimited asset downloads! From $16.50/m
Advertisement
  1. Photo & Video
  2. Theory

تخلیقیانہ طور پر ایبسٹریکٹ فوٹو گرافی کو پہچاننا

by
Length:MediumLanguages:

Urdu (اُردُو) translation by Shaan (you can also view the original English article)

فوٹوگرافی بہت سی فارم لیتی ہے اور بہت سے مختلف سٹائلز کو شامل کرتی ہے، جن میں سے زیادہ تر دستاویزی فلم (ڈاکومنٹری) یا فائن آرٹس کی قسموں میں ڈھلتے ہیں۔ ہم ایبسٹریکٹ  فوٹوگرافی کو دوسری قسم میں پاتے ہیں، بصری اظہار کا ایک ذریعہ جس کا مقصد ناظرین کو مطلع کرنا نہیں ہے، بلکہ مشغول رکھنا اور اکسانا ہے۔

اسٹيپ 1 - ایبسٹریکٹ فوٹوگرافی کیا ہے؟

 کارآمد طور پر، اس کا کوئی حقیقت میں وضاحتی معنی یا خلاصہ نہیں ہے کہ ایبسٹریکٹ فوٹوگرافی کو کس چیز کی ضرورت ہوتی ہے، اور اسی طرح ایبسٹریکٹ آرٹ کے لئے، کام کا مواد بنیادی طور پر غیر اہم اور اکثر مکمل طور پر مشکوک ہوتا ہے۔ وہ کیا ہے جو چیز کو مقدم کرتا، وہ  فارم، رنگ، لائن  اور ساخت کے اندر بناوٹ یعنی ٹیکسچر ہے، ایک ایسا ٹکڑا بنانا کہ جو بصری طور پر اکسائے۔   ایبسٹریکٹ فوٹو گرافی سے متعلق، آپ کو کسی بھی قسم کے خصوصی آلات کی ضرورت نہیں ہے، صرف ایک کیمرہ، کوئی بھی کیمرہ جو آپ کو پسند ہو، اور آپ کے تصورات۔

اسٹيپ 2 - یہ تمام اس تجویز میں ہے

تو کوئی کیسے ایک ایبسٹریکٹ تصاویر بنانے کے لئے جاتا ہے؟  یاد کرنے کے لئے سب سے پہلی چیز یہ ہے کہ آپ اپنی آنکھوں کو دلچسپ اور پر کشش موضوع کے لئے کھلا رکھیں۔ جب کبھی بھی میں تصویریں بنانے کے لئے ایبسٹریکٹ شاٹس لیتا ہوں، تو میں ہمیشہ چیز کے جبلتی تعلق سے متاثر ہوتا ہوں؛ اس سے متعلق کہ کچھ میری آنکھوں کو پکڑ لے گا اور مجھے اپنی طرف متوجہ کرے گا۔ موضوع کی طرف جذباتی طور پر رد عمل کا اظہار کریں، آپ اس بات پر غور کریں کہ آپ کیوں اس کی طرف کھنچے ہیں اور یہ کہ یہ کس طرح آپ کو محسوس کراتا ہے اور یہ آپ کو اس بارے میں مطلع کرے گا کہ کس طرح آپ نے اس کی تصویر بنانی ہے۔ موضوع کے ساتھ وقت گزاریں، محدود دائرے سے باہر نکل کر سوچیں اور اس سے آپ واقعی میں اس طرح سے رجوع کریں  کہ عموماََ  جیسے آپ نہیں کر سکیں گے، مختلف زاویوں سے اور اس کے معمول کے مقصد سے بےخبر ہو کر۔

ہر طور پر موضوع کی سفارش کرنے کے لئے کیمرے کی سیٹنگس کسی بھی   کیمرہ  میں موجود نہیں ہو گی اور حالات بہت مختلف ہوں گے، لیکن اپنے کیمرے کو مینول سیٹنگ (manual) پر کرنے سے مت گھبرائیں اور مختلف شٹر کی رفتار(shutter speeds) اور f-stops پر کیمرہ کو استعمال کریں تاکہ آپ کے موضوع (subject) کی حقیقی صلاحیت ظاہر ہو۔

اسٹيپ 3 -  اصولوں کو توڑیں!

اس بات پر غور کرنا ضروری ہے کہ موضوع کے کن ایلیمنٹس کو آپ اندر مشغول رکھنا چاہتے ہیں تا کہ آپ اپنے شاٹ کو بہترین بنا سکیں۔ اپنے تصورات کا استعمال کیا کریں، اس کی لغوی شکل میں اس موضوع کے بارے میں سوچنا چھوڑ دیں، تمام فوٹو گرافی کا تعصب بھول جائیں اورتخلیقی صلاحیتوں کے مالک بنیں۔  یہ بہت بڑا چیلنج ہو سکتا ہے کہ  فوٹو گرافی کے بنے ہوئے تصورات سے ہٹ کے کام کرنا، ساخت (composition) اور نمائش (exposure) کے حوالے سے قوانین، بلکہ اس کی بجائے subject کو فنکارانہ ذریعہ کے طور پر استعمال کریں، تقریبا اس طرح کہ جیسے آپ کے پاس ایک خالی کینوس ہو جس پر آپ اپنے آپ کا فنکارانہ طور پر اظہار کر سکیں۔ اب یہ سوچنے کا وقت ہے کہ  آپ خصوصیات یعنی فیچرز ، اور subject کے اندر کی تفصیلات، لائن، ٹیکسچر، رنگ، اور ساخت کو کس طرح زیادہ سے زیادہ کر سکتے ہیں۔

اسٹيپ 4 - پیٹرن اور لائن

غور کرنے کے لئے پہلا اہم عنصر آپ کے موضوع کے اندر پیٹرن اور لائنیں ہیں۔ اپنے موضوع کو دہان سے دیکھیں اور غور کریں کہ آبجیکٹ کے ساتھ بار بار ابھرتی ہوئی شکلیں یا تھیمز موجود ہیں یا نہیں اور انہیں اپنے فائدہ کے لئے استعمال کریں۔  میں ہمیشہ کسی چیز کی بہت سیدھی اور سڈول (straight and symmetrical) شوٹنگ کرنے کی کوشش کرتا ہوں؛ حاصل کرنے کے لئے ایک طبی منظم احساس جو میں محسوس کرتا ہوں وہ  پیٹرن  کے پر اثر انداز میں اضافہ کرے گا۔ لیکن آپ زاویوں (angles) پر بھی شوٹنگ کرسکتے ہیں جو پیٹرن کا مقابلہ کریں گے۔  موضوع کے لائنوں اور کناروں پر بھی نظر ڈالیں، کیا وہ سیدھے ہیں یا ٹیڑے، کیا وہ شاٹ میں لیڈ کرتے ہیں، شاٹ کے اندر سے یا شاٹ سے دور کی طرف۔ لائن، فوٹو گرافی میں بہت موثر انداز میں استعمال کی جا سکتی ہے جیسا کہ آنکھیں شاٹ کے ذریعے  اپنی طرف سے  لے کر اس کی آخری حد تک لائن پر عمل کرنے کی کوشش کریں گی۔  تو آپ غور کریں کہ آپ ناظرین کو کیسے مشغول رکھنا چاہتے ہیں اور آپ ان کی قیادت  کر کے کدھر لے کر جانا چاہیں  گے۔

اسٹيپ 5 - صُورَت (Form)

 ایک موضوع کی شکل یا صورت ایک اہم کردار ادا کرے گی کہ کیسے آپ اپنے  موضوع (subject) سے رجوع کرتے ہیں۔ احتیاط سے فارم (form) کا جائزہ لیں اور اس بارے میں سوچیں کہ موضوع کے کن پہلوؤں کو آپ نمایاں کرنا چاہتے ہیں ، مثال کے طور پر، یہ بہت سیدھا اورنسخے کے مطابق ہے، کیا یہ خم دار لکیریں لگاتا ہے یا حرکت دکھاتا ہے یا یہ ایک قدرتی چیز ہے جس کی شکل وقت کے ساتھ تبدیل ہو جائے گی؟  فیصلہ کریں کہ آپ کو موضوع کی فارم مجموعی طور پر تصویر کے اندر چاہیے یا آپ موضوع  میں دلچسپی کے ایک مرکز پر غور کرنا چاہتے ہیں۔ اس بارے میں بھی سوچیں کہ کیا وہاں پر کچھ جانی پہچانی شکلیں موجود ہیں کہ جن پر آپ کام کر سکتے ہیں۔ چاہے وہ دائرے ہوں، مثلث یا مسدس، ان کو اپنے فائدے کے لئے استعمال کریں!

اسٹيپ 6 - رنگ

رنگ شاید ایک ایبسٹریکٹ آرٹ کا مضبوط ترین بصری عنصر ہے، یہ ناظرین کو موضوع کے اندر لے کر جاتا ہے اور جلدی سے یہ ناظرین کو مطلع کردے گا کہ وہ کس چیز کو دیکھ رہے ہیں اور ان کے ذہن میں ایک مفروضہ اور مزاج بنا دے گا۔ کوشش کریں اور رنگ کو اظہار کے طور پر استعمال کریں، یہ اپنے شاٹس کو آنکھ کے لئے، بالکل ایک پینٹنگ کی طرح  پر کشش بنانے کا سب سے بہتر اور سب سے آسان طریقہ ہے۔ اس بارے  میں احتیاط سے سوچیں کہ آپ نے چیزوں کے کچھ پہلوؤں کو سامنے لانے کے لئے رنگ استعمال کس طرح  کرنا ہے۔

اسٹيپ 7 - آرٹیٹیکچر کے ساتھ کام کرنا

انتہائی دلچسپ ایبسٹریکٹ موضوع کے لئے فن تعمیر کرنا ہے، خاص طور پر عوامی استعمال کے لئے کمرشل عمارات اور ڈیزائن کیے گئے جدید ڈھانچے، جیسا کہ اکثر ان کی ممتاز شکل، فارم اور لائنز ہوتی ہیں، جو انہیں نمایاں کرنے کے لئے بہت آسان ہوتی ہیں۔ پرانی عمارتوں کے بہت زیادہ سٹیکچر(ساخت) ظاہر ہوتے ہیں اور یہ اکثر فطرت میں سڈول (symmetrical) ہوتی ہیں، لیکن یہ آپ کے فائدہ کے لئے بھی  استعمال کیا جا سکتا ہے جیسا کہ آپ اپنے شاٹ میں استعمال کرنے کے لئے پیٹرنز تلاش کرتے ہیں۔ نئی عمارتیں زیادہ متنوع (diverse) ہوتی ہیں، عجیب زاویوں، منحنی خطوط، ٹھوس رنگوں کے بڑے پلینز(planes) اور کئی زیادہ شیشے کا استعمال۔ اس بات کو یقینی بنائیں کہ آپ عمارت کے ساتھ وقت گزارتے ہیں، اسے اندر اور باہر سے دریافت کریں (آپ کو اندر شوٹ  کرنے کی اجازت بھی لینی پڑ سکتی ہے) اور ماہرین تعمیرات کے ڈیزائن کے کام کا فائدہ اٹھائیں!

اسٹيپ 8 - ایبسٹریکٹ اور میکرو (Abstract & Macro)

جب ایبسٹریکٹ شاٹس حاصل کرنے کے لئے کوشش کر رہے ہوں تو ایک اور تکنیک ہے جو بہت اچھا کام کرتی ہے  وہ میکرو میں کام کرنا ہے۔  موضوع کے حساب سے بہت سے ایبسٹریکٹ شاٹس ایسے ہیں کہ جب ایک فاصلے سے شاٹ لیا گیا ہو تو بالکل صحیح پہچانے جاتے ہیں۔ لیکن فوٹوگرافر، نے دلچسپی کے ایک مخصوص ایریا پر نزدیک سے غور کرنے کا  انتخاب کر لیا ہے، شاید اس کی ساخت یا رنگ کی وجہ سے۔ اس صورت میں، آپ یقین دہانی کر لیں کہ آپ نے اپنے  منظر بین (کیمرے میں نصب شیشہ جو منظر دکھاتا ہے) کو سبجیکٹ سے بھر لیا ہے؛ آپ اپنے شاٹ میں کوئی بھی خالی جگہیں نہیں چاہتے۔ ایک بار پھر، اس  زاویے کے بارے میں سوچیں کہ جس میں آپ نے موضوع  کے قریب جانا ہے، مثال کے طور پر مرکز میں تفصیل سے دیکھنے کے لئے، ایک پھول کی تصویر لینے کا سب سے زیادہ عام طریقہ، اوپر سے(تصویر لینا) ہے، لیکن آپ نیچے سے اوپر روشنی کی طرف شوٹنگ کرنے کی کوشش کر سکتے ہیں اور دیکھ سکتے ہیں کہ آپکو کیا نتائج ملتے ہیں ۔

اسٹيپ 9 - آپ ایک آرٹسٹ ہیں!

 جیسے میں  پہلے ذکرچکا ہوں،  فوٹو گرافی کی باقی زیادہ تر اقسام سے ایبسٹریکٹ فوٹو گرافی  بہت مختلف ہے۔ اس میں یہ فوٹو گرافر کے فنکارانہ اظہار پر مرکوز ہے، جو ذہن میں رکھنا  بہت قیمتی ہے۔ خاص طور پر اس حقیقت کے حوالے سےکہ جو آپ نے تصویر بنائی ہے وہ ہمیشہ دوسروں کو صاف واضح نہیں ہو گی۔ اس بات کی امید نا رکھیں کہ آپ کی ایبسٹریکٹ تصویریں لوگ بھی اسی نظر سے دیکھیں گے کہ جیسے آپ دیکھتے ہیں۔ مجھے یہ بہت پسند ہے کہ جب لوگوں کو ایک تصویر کے بارے میں مجھ سے پوچھنا پڑتا ہے کہ اس کا مواد کیا ہے اور یہ سوچتے ہیں کہ یہ  اصلی چیز سے بالکل مختلف ہے، کیونکہ وہ میرے سے ایک مکمل طور پر مختلف انداز میں یہ دیکھ رہے ہوتے ہیں، یہ ان کی ایک دلچسپ بصیرت اور ان کے  کام کرنے کا نقطہ نظر ہے۔ میں اپنے ایبسٹریکٹ کام کو بہت ذاتی سمجھتا ہوں، میں نے اس کے موضوع، نقطہ نظر, زاویہ, نمائش اور خوبصورتی کو سمجھ لیا ہے جو بہت کم لوگ بالکل اسی طرح پہچان سکیں گے، یہ ایک بہت ذاتی اظہار ہے۔

اسٹيپ 10 - باہر جاؤ اور اسے حاصل کرو!

تو اب وقت ہے وہاں باہر جانے کا اور اپنے لئے خود اس کی ایک کوشش کرنے کا۔ تصویر بنانے کے لئے  باہر گھومنے کے منصوبے بنائیں ان جگہوں کہ جہاں آپ پہلے نہیں گئے ہوئے اور اپنی آنکھیں ان مضامین (subjects) کے لئے کھلی رکھیں کہ جو آپ کی توجہ مرکوز کریں۔ ایک نئی جگہ پر آپ کو نئے تصویریں بنانے کے مواقع  گھیر لیں گے، تو اپنا وقت لیں اور منتخب کردہ مضامین میں واقعی مشغول ہو جائیں۔ میں ہمیشہ باہر کے لئے 50mm prime lens استعمال کرتا ہوں جیسے کہ یہ، خالصتا اس لئے کیونکہ یہ تیز رفتار ہے اور ایک اچھا چوڑا aperture  ہے جوکہ فنکارانہ نتائج حاصل کرنے کے لئے واقعی مدد کرتا ہے۔ ان سب میں ناکامی، صرف آپ کو ہر وقت اپنے ساتھ ایک کیمرہ رکھنا ہے تاکہ سفر کے دوران جو بھی  دلچسپی کی چیز ملے آپ اس کی تصویر بنا سکیں!

Advertisement
Advertisement
Advertisement
Advertisement
Looking for something to help kick start your next project?
Envato Market has a range of items for sale to help get you started.